تازہ ترین

بانگ سحر پر پابندی اور ڈی جے مٹھل کو قید رکھنا آذادی صحافت کے منہ پر زور دار تمانچہ ہے۔ذوالفقار علی کھرمنگی

کراچی : پھسوٹائمزاُردُو : سٹی رپورٹر

کراچی :  نوجوان سماجی رہنما،صحافی و صدر پروفیشنل سوشل ورکر فورم گلگت بلتستان ذوالفقار علی کھرمنگی نے اپنے ایک پریس ریلیز دیتے ہوٸے کہا ہے کہ ڈی جے مٹھل جیسے باہمت اور قومی درد رکھنے والے صحافی اور بانگ سحر جیسے معاشرے میں نوید سحر اور حق کی نوید دینے والے اخبار پر پابندی عاٸد کرنا آذادی صحافت کےاصولوں کے کھلم کھلا خلاف ورزی ہے۔گلگت بلتستان میں حق کی آواز بلند کرنے والوں کو دیوار سے لگایا جا رہا ہے جبکہ قوم کے مجرموں کو عزت دے کر عہدوں کی بندر بانٹ اور علاقاٸی وساٸل کو لوٹنے کے لٸیے آذاد چھوڑا ہوا  ہے۔ہماری سمجھ سے بالاتر ہے جو قومی ایشوز پر آواز حق بلند کرتے ہے انہیں غدار کہہ کر فورتھ شیڈول سمیت حوالات کی نذر کیا جاتا ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ موجودہ حکومت گلگت بلتستان کو نٸے پیکج دینے جا رہے ہیں جو کہ بہت ہی اچھا اقدام ہے۔لیکن یہ پیکج اس وقت تک یہاں کے عوام خود مملکت اسلامی پاکستان و کشمیر کاز کے لٸیے سود مند نہیں ہو گا جب تک گلگت بلتستان میں آذاد کشمیر طرز کے خود مختار آٸین ساز اسمبلی و حکومت کا قیام اور بھٹو دور کے ختم کیٸے ہوٸے  اسٹیٹ سبجیکٹ رول کو بحال نہیں کیا جاتا ہیے۔انہوں نے مزید کہا ہے کہ گلگت بلتستان کے عوام آپ صدارتی آرڈنینس کے زریعے دٸیے گٸے کسی بھی پیکج کے نام پر بے وقوف بنیے کے لٸیے تیار نہیں ہے لہذا وفاقی حکومت کو چاہیے کہ وہ گلگت بلتستان کے عوام کو عالمی قوانین و اقوام متحدہ کے قرارداد کے مطابق ان کے جاٸز حقوق دیا جاٸے

About Passu Times

ایک تبصرہ

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

error: Content is protected !!